گیس کے نئے ذخائر دریافت،پریشان پاکستانیوں کے لیے خوشخبری

" >

کراچی( ویب ڈیسک) عین سردیوں کے آغاز پر ملک میں گیس کے نئے ذخائر دریافت کر لیے گئے، نئے ذخائر سندھ میں کھوری واہ مغربی کے مقام پر دریافت ہوئے، 41 لاکھ کیوبک فٹ یومیہ گیس برآمد ہونا شروع۔ تفصیلات کے مطابق گیس کی سب سے زیادہ پیداوار والے صوبہ سندھ میں گیس کے نئے ذخائر دریافت ہوئے ہیں۔ سندھ کے علاقے کھوری واہ میں چند روز کے دوران گیس کے ذخائر کی دوسری دریافت ہوئی ہے۔

چند روز قبل سندھ کے علاقے کھوری واہ جنوبی سے تیل اور گیس کے ذخائر دریافت ہوئے تھے۔ جب اب تازہ ترین پیش رفت میں گیس کے نئے ذخائر سندھ میں کھوری واہ مغربی کے مقام پر دریافت ہوئے ہیں۔ ذرائع وزارت پیٹرولیم کے مطابق اس مقام پر 22 ستمبر کو گیس کی تلاش کے لیے کنویں کی کھدائی شروع کی گئی تھی اور اب تقریباً 2 ماہ کی کھدائی کے بعد ذخائر کی دریافت میں کامیابی حاصل ہوئی۔

2 ماہ کے دوران 2 ہزار 853 میٹر گہری کھدائی کی گئی جس کے بعد اب کھوری واہ گیس کنویں سے 41 لاکھ کیوبک فٹ یومیہ گیس برآمد ہونا شروع ہو گئی۔ واضح رہے کہ ایک ماہ قبل بلوچستان میں بھی قدرتی گیس کے نئے ذخائر دریافت ہوئے تھے۔ آئل اینڈ گیس ڈویلپمنٹ کمپنی صوبہ بلوچستان کے ضلع کوہلو میں 5 ماہ کی محنت کے بعد گیس ذخائر دریافت کرنے میں کامیاب رہی تھی۔

بلوچستان کے ضلع کوہلو میں مغلکوٹ فارمیشن پر جندران ویسٹ ایکس 1 سے گیس کے ذخائر دریافت کیے گئے ہیں۔ او جی ڈی سی ایل نے اس مقام پر 19 مئی 2021 کو کھدائی کا عمل شروع کیا اور 5 ماہ کے عرصے کے دوران 1627 میٹر تک کی کھدائی کی گئی۔ اس قدر گہرائی میں کھدائی کرنے کے بعد بالآخر مذکورہ سائٹ سے گیس کے ذخائر دریافت کر لیے گئے۔ مذکورہ کنویں سے کنڈنسٹ کے ساتھ ساتھ 2.391 ایم ایم ایس سی ایف ڈی گیس کی پیداوار حاصل ہو گی

?>

اپنا تبصرہ بھیجیں