ثاقب نثار ہمت کریں،قوم کو سچ بتائیں ورنہ۔۔۔۔مریم نواز کی پریسکانفرنس میں کھلم کھلا دھمکی

" >

اسلام آباد(ویب ڈیسک) مریم نواز کی چک شہزاد میں پارٹی کے سینئیر ممبران کے ہمراہ پریس کانفرنس،نواز شریف اور اپنی نا اہلی کے حوالے سے کھل کر بات کی،سابق چیف جسٹس ثاقب نثار کی آڈیو کے حوالے سے بھی تفصیلی گفتگو کی اور انہیں سچ بتانے کی ہدایت کی

مریم نواز کا کہناتھا کہ ثاقب ثنار سے جب پوچھا گیا کہ آپ ان الزامات کے آگے اپنا دفاع عدالت جا کر کریں گے تو انہوں نے جواب دیا کہ کہ میں پاگل ہوں کہ کورٹ کچہری کے چکر لگاتا رہوں ۔اس وقت کا وزیراعظم وہ کوئی پاگل تھا جس نے اپنے پورے خاندان اور پوری پارٹی کے سمیت ، جانتے ہوئے کہ یہ انتقام ہے ، وہ قانون کے سامنے پیش ہوتے رہے ، اپنی تین نسلوں کا حساب دیا ۔

ان کا کہناتھا کہ میں ثاقب نثار کو کہنا چاہتی ہوں کہ آج نہیں تو کل سچ قوم کو بتانا پڑے گا ، ابھی بھی وقت ہے قوم کو بتائیں ، جرات کریں ، کہ کس نے آپ کو نوازشریف اور مریم نواز کو سزا دینے پر مجبور کیا ، کس نے کہا کہ عمران خان کو آپ نے لانا ہے ،اگر آپ کی نظر میں وہ سزا نہیں بنتی تھی جس کا اعتراف آپ نے آڈیو میں کیا تو آپ نے قانون اور انصاف کا قتل کیوں کیا ، آپ نے وہ سزا کس کے کہنے پر دی ، یہ آپ کو ایک نہ ایک دن قوم کو بتانا پڑے گا ، آپ انصاف کی سب سے بلند کرسی پر بیٹھے تھے ، وہ کون تھا جسے آپ چیف جسٹس آف پاکستان ہوتے ہوئے بھی انکار نہیں کر سکے ۔

حکومت ثاقب نثار کو نہیں بلکہ خود کو بچار ہی ہے ، ثاقب نثار سے درخواست ہے کہ آپ اپنا دفاع خود کریں جب یہ آپ کا دفاع کرتے ہیں تو آپ کا کیس مزید خراب ہوتاہے ، ثاقب نثار سے کہنا چاہتی ہوں کہ جب گلگت بلتستان کے چیف جج کا حلف نامہ آیا تو آپ کا بھی حلف نامہ آنا چاہیے تھا ، یہ جواب نہیں آنا چاہیے تھا کہ میں کوئی پاگل ہوں کبھی پیش نہیں ہوں گا، اب فرانزک رپورٹ آ گئی ہے تو آپ کو بھی فرانزک کیلئے خود کو پیش کرنا چاہیے ۔

میں ہنس رہی تھی کہ حکومت کہتی ہے کہ سب کے پیچھے ن لیگ ہے ، مجھے بڑی ہنسی آئی تو میں پوچھنا چاہتی ہوں کہ کیا ن لیگ نے نوازشریف کو اقامے پر نااہل کروایا، کیا ن لیگ نے جنرل فیض کو شوکت عزیز صدیقی کے پاس بھیجا تھا ، کیا ن لیگ نے پارٹی لیڈران پر جھوٹے مقدمات بنائے ، کیا ن لیگ نے الیکشن چوری کیا اور عمران خان کو وزیراعظم بنایا ۔

?>

اپنا تبصرہ بھیجیں