پاکستانیوں کے لیے بری خبر!!! 21 بنیادی اشیاء کی قیمتوں میں انتہائی اضافہ، دودھ ،گھی سمیت کو ن کون سے اشیاء شامل؟؟

" >

اسلام آباد(ویب ڈیسک)دارہ شماریات نے ہفتہ وار مہنگائی کی رپورٹ جاری کر دی ہے جس کے مطابق رواں ہفتے ملک میں مہنگائی کی شرح میں صفر اعشاریہ اڑتالیس فیصد کمی واقع ہوئی۔

رپورٹ کے مطابق مہنگائی کی مجموعی شرح اٹھارہ فیصد سے زائد رہی ،تاہم کم آمدنی والے طبقے کے لیے یہ شرح انیس اعشاریہ بارہ فیصد رہی، اکیس اشیاء کی قیمتوں میں اضافہ ہوا، گیارہ میں کمی ہوئی اور انیس اشیاء کی قیمتوں میں استحکام رہا۔

اعداد و شمار کے مطابق ایک ہفتے کے دوران گھی پانچ روپے باسٹھ پیسے فی کلو مہنگا ہوا جس کے بعد گھی کی اوسط قیمت تین سو چھیانوے روپے 66 پیسے فی کلو ہو گئی ہے جبکہ دال مونگ تین روپے اکیالیس پیسے، دال مسور چار روپے ستتر پیسے اور دال چنا اکانوے پیسے فی کلو مہنگی ہوئی۔

حالیہ ہفتے کے دوران ایک سو نوے گرام چائے کی قیمت میں ایک روپیہ بائیس پیسے اضافہ ہوا جبکہ آگ جلانے والی لکڑی کی قیمت میں بھی اضافہ دیکھا گیا جس کے بعد فی من لکڑی کی قیمت سات سو تہتر روپے ستتر پیسے پر پہنچ گئی ہے۔ اس کے علاوہ دودھ، دہی، مٹن، پلین بریڈ اور چاول بھی مہنگے ہوئے۔

ادارہ شماریات کے مطابق ایک ہفتے میں گیارہ اشیاء کی قیمتوں میں کمی ہوئی۔ زندہ مرغی اوسطاً انیس روپے چالیس پیسے سستی ہوئی جس کے بعد مرغی کی اوسط قیمت دو تینتیس روپے بتیس پیسے ہو گئی ہے۔

چینی مزید ایک روپے بیالیس پیسے کمی کے بعد بانوے روپے چونتیس پیسے فی کلو پر آ گئی ہے جبکہ ٹماٹر انیس روپے تریپن پیسے فی کلو سستے ہوئے، آٹے کے بیس کلو والے تھیلے کی قیمت میں بھی چھ روپے چوراسی پیسے کمی آئی، ایل پی جی کا گھریلو سلینڈر بھی ساٹھ روپے اکیس پیسے سستا ہوا۔

اعداد و شمار کے مطابق ایک ہفتے کے دوران انڈے، لہسن، سرخ مرچ کی قیمتوں میں بھی کمی آئی جب کہ انیس اشیاء کی قیمتوں میں کوئی ردو بدل نہیں ہوا۔

?>

اپنا تبصرہ بھیجیں